حج کی فرضیت و فضیلت،ارکان و مسائل:08

تجاویز:
٭منیٰ میں بیشتر خیمے قبلہ رُخ نہیں ہیں جس کی وجہ سے باجماعت نماز میں خاصی دقت پیش آتی ہے۔خیموں کی چاروں  ضلعی دیواروں میں سے کوئی ایک دیوار قبلہ رُخ ہو نی چاہیئں تاکہ دورانِ نماز صف بندی میں آسانی ہو۔
٭ منیٰ، عرفات اور مزدلفہ میں بنائے گئے چھوٹے چھوٹے عوامی بیت الخلا کے اندر ہی غسل کے لئے شاور نصب ہیں ۔
غسل خانے اور بیت الخلاالگ الگ ہونے چاہیئں تاکہ عازمینِ حج کو غسل کرتے ہوئے کراہیت محسوس نہ ہو اور دورانِ غسل ناپاک چھینٹوں سے بھی بچا جاسکے۔ احرام کے ساتھ ان ’ ٹوائلیٹ والے چھوٹے چھوٹے غسل خانوں ‘ کا استعمال مردوں کے لئے تو مشکل ہوتا ہی ہے، یقیناََ خواتین کو بھی دقت پیش آتی ہوتی ہوگی۔
٭خیموں کی رہائش گاہوں میں دیواروں کے ساتھ ساتھ ہر بستر کے اوپر چار پانچ فٹ کی بلندی پر ایسے مضبوط ہُک نصب ہوں جن پر حجاج اپنے سامان کے بیگ لٹکا سکیں ۔ بیگ نیچے فرش پر رکھے جانے کی وجہ سے دستیاب شدہ قلیل جگہ مزید
مختصر ہوجاتی ہے۔ اور حجاج کے بیگز بھی اِدھر اُدھر ہوجاتے ہیں ۔
٭ بالوں کاحلق یا قصر: حج کا واجب رکن ہے اوراس کی ادائیگی کے بغیر کوئی حاجی احرام کی پابندیوں سے باہر نہیں آسکتا۔منیٰ میں حلق یا قصر کا کوئی معقول انتظام نہیں ۔ صرف جمرات کے قریب حجام کی چند دکانیں ہیں جو لاکھوں حجاج کے لےے ناکافی ہیں ۔ لہٰذا لوگ منیٰ میں اپنی مدد آپ کے تحت ایک دوسرے کے بال مونڈتے نظر آتے ہیں ۔ جنہیں سعودی شُرطے ایسا کرنے سے روکتے ہوئے بھی نظر آتے ہیں ۔ 10 ذی الحجہ کوہر خیمے میں یا دو تین متصل خیموں کےلےے علیحدہ علیحدہ عارضی حجاموں کا انتظام مکتب کی طرف سے کیا جائے جو مقررہ ریٹ پر بالوں کومونڈےیاقصرکرے ۔جمرات کے قریب واقع باربر شاپ پر رش کی وجہ سے وہاں حجام حضرات بخشش لیتے بھی نظرآتے ہیں 20 ریال مقررہ اجرت کے علاوہ 50 ریال تک کی بخشش لیتے ہوئےبھی لوگوں نے دیکھا۔گویا حاجی صاحبان نے 70ریال صرف بال مونڈنے کے دیئے۔ واضح رہے کہ یہ اُن بخششوں کا تذکرہ ہے جو جبراََ لی جارہی ہوتی ہیں ۔ واضح رہے کہ خانہ کعبہ کے ارد گرد قائم مستقل باربر شاپس میں عمرہ ادا کرنے والے زیادہ سے زیادہ دس ریال دے کر حلق کراتے ہیں ۔ بعض باربر شاپ والے تو محض 5 ریال یا اس سے بھی کم لیتے ہوئے نظر آتے ہیں۔
٭ عوامی بیت الخلا کے علاوہ ہر خیمہ کے اندر بھی ایک ایک وضو خانہ اور ممکن ہو تو ایک ایک حمام بھی قائم کیا جائے تاکہ باہر مشترکہ حمام میں رات دن ہر نماز سے قبل طویل قطاروں سے بچا جاسکے ۔ شہری خواتین کے لےے بالخصو ص یہ ایک مشکل ترین مرحلہ ہوتا ہے کہ عموماََ مردوں کے بیت الخلا سے متصل واقع خواتین کے بیت الخلا کی طویل قطار میں کھڑی ہوں ۔ ہر خیمہ کے اندر کم از کم ایک یا دو واش رومز اور وضو خانہ ہونے کی صورت میں لوگ خیموں کے اندر ہی باری باری فارغ ہولیا کریں گے اور باہر رش کم نظر آیا کرے گا۔
٭سعی: وھیل چیئر پر طواف وسعی کروانے والے مزدور پیشہ مول تول کے ذریعہ 500 ریال تک کا مطالبہ کرتے نظر آتے ہیں ۔ تجویز ہے کہ اس کے ریٹس فکس کئے جائیں جو 50 تا 100 ریال سے زائد نہ ہوں ۔ اور اس کے باقاعدہ کاؤنٹر قائم ہوں جہاں سے ٹوکن بمع نمبر جاری ہوں ۔ تاکہ لوگ لوگ ٹوکن لے کر اپنی باری کا انتظار کریں ۔
٭طوافِ زیارت کے لئے منیٰ سے بیت اللہ شریف جانے اور آنے کے لئے ٹرانسپورٹ کا معقول انتظام نہیں ہوتا۔اس ضمن میں باقاعدہ بڑی بسیں مختلف مکاتب کے لئے مختلف اوقات میں چلائی جائیں ۔ ان بسوں کا کرایہ بھی مقررہ ہو۔اس
مقصد کے لےے لوگوں کو بالخصوص بوڑھوں اور خواتین کو میلوں چلنا پڑتا ہے تب کہیں جاکر کوئی نجی سواری ملتی ہے جومنہ مانگا کرایہ طلب کرتی ہے۔ بہت سے لوگ تو منیٰ تا بیت اللہ شریف پیدل بھی جاتے آتے نظر آئے۔بعض بسوں ویگنوں والوں نے 50 پچاس ریال فی سواری تک کرایہ وصول کیاجاتا ہے  اور بیت اللہ اور منٰیٰ سے خاصا دور بھی اتارا جاتا ہے۔
٭ منیٰ میں مقیم جمرات سے دور مکاتب والوں کے لےے بھی سواری کا انتظام ہو۔ تاکہ انہیں منیٰ والی اپنی قیام گاہ سےجمرات آنے جانے میں آسانی ہو۔
٭ عرفات میں قناتوں کے مختلف کیمپس لگے ہوتے ہیں جن پر باقاعدہ نمبر الاٹ ہوتے ہیں ۔ یہاں حاجی صبح سے شام تک رہتے ہیں ۔ اسی طرح عرفات سے مزدلفہ پہنچ کرحاجی وہاں پوری رات رہتے ہیں ۔ مگر مزدلفہ میں شب بسری کےلئےکوئی باقاعدہ نظام نہیں ہوتا۔عرفات کی طرح مزدلفہ میں بھی مکاتب کی طرز پر کیمپس قائم کئے جائیں ۔ چونکہ یہاں کھلے آسمان تلے شب بسر کرنا ہوتا ہے۔ لہٰذا صرف تین یا چار فٹ اونچی قناتوں کی باؤنڈریز ہی کافی ہونگی ۔تاکہ ان مجوزہ باؤنڈریز کے اندر خواتین و مرد الگ الگ حصوں میں شب بسری اور وقوف کر سکیں ۔ اس طرح خواتین خصوصاََ موجودہ بے پردگی سے بچ سکیں گی۔ اس وقت وہ لب سڑک اِدھر اُدھر بے پردہ الٹی سیدھی لیٹی نظر آتی ہیں ۔ اور ان خواتین کے محرم مرد حضرات بوقتِ ضرورت ان کی تلاش میں دیگر خواتین کو دیکھنے پر مجبور ہوتے ہیں ۔ مزدلفہ میں بھی حاجیوں کے رات کے قیام کو عرفات ہی کی طرح باقاعدہ انتظام کیا جائے۔
٭ قبلہ رخ: منیٰ عرفات اور مزدلفہ ۔ ان تینوں جگہوں پر قیام اور وقوف کے لئے کی گئیں حد بندیاں قبلہ رُخ سے آزادہیں ۔ نمازیوں کو آڑی ترچھی صفیں بنانی پڑتی ہیں ۔ منیٰ کے خیمہ اور عرفات کی قناتیں اورمزدلفہ کی مجوزہ سیٹنگ اس طرح کی جائے چہار دیواری کی کوئی نہ کوئی دیوار قبلہ کی طرف ہو تاکہ کم جگہ میں سیدھی صفیں بن سکیں اور لوگ آسانی سے نمازیں پڑھ سکیں ۔
٭ مزدلفہ میں اکثر جگہوں پر اور عرفات میں کہیں کہیں قیام کرنے کی جگہوں پر زمین کی سطح غیر ہموار ہے۔ان غیرہموار سطحوں پر نمازیوں کی صفیں بھی بے ترتیب ہوتیں ہیں اور کچھ دیر آرام کی خاطر لیٹنے والے حاجیوں کو بھی دقت کاسامنا ہوتا ہے۔ سعودی حج انتظامیہ کو چاہیئں کہ ان نا ہموار زمینوں کو ہموار کروادے۔
٭ کنکریاں : مزدلفہ میں جگہ جگہ کنکریوں کے ڈھیر لگائے جائیں تاکہ انہیں ”چننا “نہ پڑے۔ اس مرتبہ مزدلفہ میں جگہ جگہ کنکریوں کے پیکٹس بھی تقسیم کئے گئے ۔ ایسا انتظام ہر حاجی کے لئے ہونا چاہئے ۔ عرفات میں کھانے کے پیکٹس کےساتھ ہی کنکریوں کا پیکٹس بھی تقسیم کیا جا سکتا ہے۔ یا پھر مزدلفہ ہی میں وافر مقدار میں پیکٹس تقسیم کئے جائیں تاکہ یہ پیکٹس ہر حاجی کو مل سکیں ۔ ہر حاجی کو کل 70 کنکریاں درکار ہوتی ہیں ۔ چنانچہ احتیاطاََ ہر پیکٹس میں 80 کنکریاں ہوں تو بہتر ہوگا۔
خطبہ حج : مفتی اعظم سعودی عرب ۹ ذی الحجہ کو میدانِ عرفات کے مسجد نمرہ میں خطبہ حج دیتے دیتے ہیں ۔حج کےدوران بہت کم لوگوں کو یہ اعزاز حاصل ہوتا ہے کہ وہ مسجدِ نمرہ میں جاکر خطبہ حج سن سکیں ۔ چنانچہ یہ خطبہ ریڈیو سے براہ راست نشر کیا جاتا ہے مگر پھر بھی خطبہ سننے کا ہر کیمپ میں انتظام نہیں ہوتا۔کاش تمام مکاتب کے ذمہ داران اس طرف توجہ دے سکیں۔
یہ روایت ہے کہ ہر سال ۹ ذی الحجہ کو غلافَ کعبہ تبدیل کیا جاتا ہے ۔ نیا غلافِ کعبہ تقریباً 2سے 2.5کروڑ ریال کی لاگت سے تقریباً670تا700 کلو گرام خالص ریشم سے تیار کیا جاتا ہے ۔ اس غلاف کی تیاری میں تقریباً15.سے200کلوگرام خالص سونا اور چاندی بھی استعمال کی جاتی اور اس پر بیت اللہ کی حرمت اور حج کی فرضیت و فضیلت کے بارے میں قرآنی آیات کشیدہ کی جاتی ہیں ۔ غلافِ کعبہ کا سائز 658 مربع میٹر ہوتا ہے۔ اور یہ 47 حصوں پر مشتمل ہوتاہے۔ ہرحصہ 14 میٹر طویل اور 95 سینٹی میٹر چورا ہوتا ہے۔ غلافِ کعبہ کی تبدیلی کے موقع پر اسلامی ممالک کے سفیر، اعلیٰ سعودی حکام اور شہر کی اہم شخصیات شریک ہوتی ہیں۔واضح رہے کہ اُتارے جانے والے غلافِ کعبہ کے ٹکڑے بیرونی ممالک سے آئے ہوئے سربراہانِ مملکت اور دیگر معززین کو بطور تحفہ پیش کر دئے جاتے ہیں ۔ اب سعودی حکام حج کےدنوں میں غلافِ کعبہ کو سطح زمین سے کوئی دس فٹ بلند سمیٹ دیتے ہیں ۔ کیونکہ قبل ازیں حج پر آئے ہوئے بعض حجاج کرام تبرک کی خاطر غلافِ کے ٹکڑے کاٹ کر اپنے ہمراہ لے جانے لگے تھے۔
کسی زمانے میں ہر سال حج کے موقع پر منیٰ کے خیموں میں آگ لگنے سے حجاج کی شہادتوں کی خبریں سنا کرتے تھے۔لیکن جب سے منیٰ میں فائر پروف خیمے نصب کئے گئے ہیں ، آگ لگنے کے واقعات تقریباََختم ہو کر رہ گئے ہیں ۔ واضح رہے کہ منیٰ میں تین ارب ریال کی لاگت سے  40 ہزار فائر پروف خیمے بنائے گئے ہیں ۔بنیادی ارکانِ حج کو کے علاوہ قرآن و حدیث سے براہِ راست اقتباسات درجہ ذیل ہیں ساتھ ہی مسائلِ حج پرکتاب الحج سے منتخب احادیث پیش خدمت ہیں تاکہ آپ ہدایاتِ نبوی سے استفادہ کر سکیں ۔
2 comments

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Pak Islamic Library

Authentic Islamic Books

اردو سائبر اسپیس

Promotion of Urdu Language and Literature

سائنس کی دُنیا

اُردو زبان کی پہلی باقاعدہ سائنس ویب سائٹ

~~~ اردو سائنس بلاگ ~~~ حیرت سراے خاک

سائنس، تاریخ، اور جغرافیہ کی معلوماتی تحقیق پر مبنی اردو تحاریر....!! قمر کا بلاگ

BOOK CENTRE

BOOK CENTRE 32 HAIDER ROAD SADDAR RAWALPINDI PAKISTAN. Tel 92-51-5565234 Email aftabqureshi1972@gmail.com www.bookcentreorg.wordpress.com, www.bookcentrepk.wordpress.com

اردوادبی مجلّہ اجرا، کراچی

Selected global and regional literatures with the world's most popular writers' works

Urdu Islamic Books

islamic books in urdu | Best Urdu Books | Free Urdu Books | Urdu PDF Books | Download Islamic Books | besturdubooks.wordpress.com

ISLAMIC BOOKS HUB

Free Authentic Islamic books and Video library in English, Urdu, Arabic, Bangla Read online, free PDF books Download , Audio books, Islamic software, audio video lectures and Articles Naat and nasheed

عربی کا معلم

وَهٰذَا لِسَانٌ عَرَبِيٌّ مُّبِينٌ

International Islamic Library Online (IILO)

Contact Us: Deenefitrat313@gmail.com ..... (Mobile: + 9 2 3 3 2 9 4 2 5 3 6 5)

Taleem-ul-Quran

Khulasa-e-Quran | Best Quran Summary

Al Waqia Magazine

امت مسلمہ کی بیداری اور دجالی و فتنہ کے دور سے آگاہی

TowardsHuda

The Messenger of Allaah sallAllaahu 3Alayhi wa sallam said: "Whoever directs someone to a good, then he will have the reward equal to the doer of the action". [Saheeh Muslim]

آہنگِ ادب

نوجوان قلم کاروں کی آواز

آئینہ...

توڑ دینے سے چہرے کی بدنمائی تو نہیں جاتی

بے لاگ :- -: Be Laag

ایک مختلف زاویہ۔ از جاوید گوندل

اردو ہے جس کا نام

اردو زبان کی ترویج کے لیے متفرق مضامین

آن لائن قرآن پاک

اقرا باسم ربك الذي خلق

پروفیسر عقیل کا بلاگ

Please visit my new website www.aqilkhan.org

AhleSunnah Library

Authentic Islamic Resources

ISLAMIC BOOKS LIBRARY

Authentic Site for Authentic Islamic Knowledge

منہج اہل السنة

اہل سنت والجماعۃ کا منہج

waqashashmispoetry

Sad , Romantic Urdu Ghazals, & Nazam

!! والله أعلم بالصواب

hai pengembara! apakah kamu tahu ada apa saja di depanmu itu?

Life Is Fragile

I don’t deserve what I want. I don’t want what I have deserve.

I Think So

What I observe, experience, feel, think, understand and misunderstand

creating happiness everyday

an artist's blog to document her creativity, and everyday aesthetics

mindandbeyond

if we know we grow

Muhammad Altaf Gohar | Google SEO Consultant, Pakistani Urdu/English Blogger, Web Developer, Writer & Researcher

افکار تازہ ہمیشہ بہتے پانی کیطرح پاکیزہ اور آئینہ کیطرح شفاف ہوتے ہیں

بے قرار

جانے کب ۔ ۔ ۔

سعد کا بلاگ

موت ہے اک سخت تر جس کا غلامی ہے نام

دائرہ فکر... ابنِ اقبال

بلاگ نئے ایڈریس پر منتقل ہو چکا ہے http://emraaniqbal.comے

Kaleidoscope

Urban desi mom's blog about everything interesting around.

I am woman, hear me roar

This blog contains the feminist point of view on anything and everything.

تلمیذ

Just another WordPress.com site

سمارا کا بلاگ

کچھ لکھنے کی کوشش

Guldaan

Islam, Pakistan and Politics

کائنات بشیر کا بلاگ

کہنے کو بہت کچھ تھا اگر کہنے پہ آتے ۔۔۔ اپنی تو یہ عادت ہے کہ ہم کچھ نہیں کہتے

Muhammad Saleem

Pakistani blogger living in Shantou/China

Writer Meets World

Using words to conquer life.

Musings of a Prospective Shrink

sugar spice and everything nice

Aiman Amjad

think, discuss, review and express...

%d bloggers like this: