حج و عمرہ کے چند اصلاح طلب اُمور:01

احرام

٭احرام کے موقع پر نیت کا زبانی اظہار کرنا دین میں مشروع نہیں ہے۔ شریعت میں جس طرح دیگرعبادات؛مثلاًنماز،زکوٰۃ، روزہ واعتکاف اور قربانی میں نیت کے زبانی اظہار کا کوئی حکم نہیں دیا گیا،اسی طرح حج و عمرہ کے آغاز میں احرام کے موقع پر بھی مخصوص الفاظ اداکر کے نیت کرنا دین میں مشروع نہیں ہے۔عام طور پر حج و عمرہ کی کتابوں میں جو بتایا جاتا ہے کہ اس موقع پر آدمی
اللّٰهُمَّ اِنِّیْ أُرِيْدُ الْحَجَّ فَيَسِّرْهُ لِیْ وَتَقَبَّلْهُ مِنِّیْوغیرہ
کے الفاظ سے نیت کرے، اِس طرح کی کوئی چیز قرآن وسنت اور نبی ﷺکے علم و عمل سے ثابت نہیں ہے۔
اور عبادات میں جس چیز کو آپ کی نسبت حاصل نہیں،اُسے دین کی حیثیت سے،بالبداہت واضح ہے کہ قطعاً پیش نہیں کیاجا سکتا۔
 ٭بعض لوگ دانستہ طور پر میقات یااُس کے محاذ ات سے احرام باندھنے کا اہتمام نہیں کرتے۔ان کا یہ عمل بھی درست نہیں ہے۔حج و عمرہ کے مناسک میں میقات سے احرام باندھنے کو چونکہ شریعت کی حیثیت سے مقرر کیا گیا ہے،چنانچہ اِس سے غفلت کی کسی کے لیے کوئی گنجائش نہیں ہے۔ حج یا عمرہ کی غرض سے سفر کرنے والے ہر شخص کو اِس کا اہتمام کرناچاہیے۔
 ٭عام طور پر حج یا عمرہ کے احرام کے موقع پر دو رکعت نماز کی ادائیگی کو ضروری اور مناسک کا حصہ سمجھاجاتاہے۔اِسطرح کی کوئی نماز اس موقع پر شریعت میں مقرر نہیں کی گئی ہے۔نبی ﷺسے بھی اِس طرح کی کوئی چیزمنقول نہیں ہے۔آدمی بغیر کسی نماز کے بھی احرام باندھ سکتا ہے۔ اور وہ چاہے تواُس موقع پر اگرکسی نماز کا وقت ہوتواُس سے فارغ ہو کر بھی تلبیہ پکارسکتا ہے۔ تاہم ان میں سے کسی عمل کو دین و شریعت کی حیثیت سے پیش نہیں کیاجا سکتا۔
 ٭حالت احرام میں مردوں کے لیے اس طرح کے کوئی جوتے پہننا بھی لازم نہیں ہے کہ جن میں اُن کے پاؤں کی اوپروالی اُبھری ہوئی ہڈی کھلی رہے،جیساکہ بعض اہل علم کی رائے ہے۔اِس طرح کی کوئی چیز بھی حج و عمرہ کی شریعت میں موجود نہیں ہے۔اس باب میں جو چیز شریعت کی حیثیت سے مقرر کی گئی ہے، وہ صرف یہ ہے کہ آدمی پاؤں میں جوتےیاموزے، جو کچھ بھی پہنے، وہ بہر حال ٹخنوں سے نیچے تک ہونے چاہییں۔
 ٭یہ تصور بھی درست نہیں ہے کہ احرام کے کپڑے دھوئے جا سکتے ہیں،نہ کسی صورت میں تبدیل کیےجاسکتےہیں۔ضرورت محسوس ہو تو مرد اور خواتین دونوں، لباسِ احرام کو دھو بھی سکتے ہیں اور اُسے تبدیل بھی کیاجاسکتاہے۔ حج و عمرہ کرنے والوں کے لیے دین نے اِس طرح کی کوئی پابندی عائد نہیں کی ہے۔
 ٭حالت احرام میں خواتین  کا چہرے کو کپڑا مَس کیے بغیر نقاب پہننا بھی قطعاً درست نہیں ہے۔ اِس حالت میں خواتین کے لیے،جیسا کہ عام طور پر خیال کیا جاتا ہے، شریعت کا حکم یہ نہیں ہے کہ وہ نقاب کا کپڑا اپنے چہرے پر نہ لگنےدیں۔بلکہ حکم یہ ہے کہ وہ چہرے پر نقاب نہ پہنیں ؛اُسے کھلا رکھیں۔چنانچہ اِس سے واضح ہے کہ یہ غلطی حکم کو صحیح طور پر نہ سمجھنے کی بنا پر عام ہوئی ہے۔ اِس عمل کے لیے بھی دین میں کوئی ماخذ موجود نہیں ہے۔البتہ مردوں سے اختلاط کے کسی ایسے موقع پر جس میں خواتین یہ ضرورت محسوس کریں کہ اُن سے اختلاط مناسب نہیں ہے تو وہ کسی پردے کی اوٹ میں رہ سکتی ہیں۔تاہم حالت احرام میں نقاب وغیرہ پہن کر چہرہ چھپائے رکھنے کا اہتمام کرنے کی اجازت اُنہیں قطعاًحاصل نہیں ہوسکتی۔
٭8 ذو الحجہ کو مکہ مکرمہ میں حج کا احرام باندھنے کے بعد بیت اللہ میں حاضری اور دو رکعت نماز ادا کرنے کو باعث فضیلت سمجھنا بھی دین میں کسی اعتبار سے درست نہیں ہے۔ حج کے احرام کے موقع پر اِس طرح کی کوئی چیز دین میں پسندیدہ عمل کی حیثیت سے ثابت نہیں ہے۔
نبی ﷺکے کسی ارشاد سے بھی اِس طرح کے کسی عمل کی کوئی فضیلت روایت نہیں ہوئی ہے۔پھر نبی ﷺکا اپنا عمل جوروایتوں میں نقل ہوا ہے، وہ بھی اِس کے بر خلاف ہے۔حجۃ الوداع کے موقع پر آپ شہر مکہ کے مشرقی جانب کے نشیبی علاقے میں مقیم تھے۔اپنی جائے قیام سے احرام باندھ کر آپ بیت الحرام میں حاضر نہیں ہوئے،بلکہ سیدھے منیٰ کی طرف روانہ ہوئے تھے۔
٭بعض لوگ حج کے لیے مسجد حرام میں جا کر احرام باندھنے کو باعث فضیلت سمجھتے ہیں۔اِس تصور کے لیے بھی دین میں کوئی ماخذ موجود نہیں ہے۔
٭یہ تصور بھی درست نہیں ہے کہ عمرہ میں استعمال شدہ احرام کے کپڑوں کو حج میں لباسِ احرام کے طور پراستعمال نہیں کیا جا سکتا۔اس طرح کا کوئی حکم حج و عمرہ کی شریعت اور نبی ﷺکے ارشادات میں موجود نہیں ہے۔
٭بعض حضرات کے ہاں ایک تصور یہ بھی پایا جاتا ہے کہ احرام باندھتے وقت آدمی کے لیے جوتے پہنےہوئےہوناضروری ہے ؛بصورتِ دیگر اس کے بعد جوتے پہننے کی اجازت بھی ختم ہو جائے گی۔یہ تصور بھی بالکل باطل ہے۔اِس کی حیثیت بھی دین میں ایجاد بندہ کی ہے۔دینی اعتبارسے جوتے پہنے ہوئے احرام باندھنا کوئی ضروری چیز ہے، نہ یہ احرام کی کوئی شرط ہے۔احرام جوتے پہنے بغیر بھی باندھا جا سکتا ہے۔احرام باندھ لینے کے بعد جوتے پہننے میں بھی کوئی حرج نہیں ہے۔ان میں سے کسی عمل کو کوئی دینی حیثیت حاصل نہیں ہے۔

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Pak Islamic Library

Authentic Islamic Books

اردو سائبر اسپیس

Promotion of Urdu Language and Literature

سائنس کی دُنیا

اُردو زبان کی پہلی باقاعدہ سائنس ویب سائٹ

~~~ اردو سائنس بلاگ ~~~ حیرت سراے خاک

سائنس، تاریخ، اور جغرافیہ کی معلوماتی تحقیق پر مبنی اردو تحاریر....!! قمر کا بلاگ

BOOK CENTRE

BOOK CENTRE 32 HAIDER ROAD SADDAR RAWALPINDI PAKISTAN. Tel 92-51-5565234 Email aftabqureshi1972@gmail.com www.bookcentreorg.wordpress.com, www.bookcentrepk.wordpress.com

اردوادبی مجلّہ اجرا، کراچی

Selected global and regional literatures with the world's most popular writers' works

Urdu Islamic Books

islamic books in urdu | Best Urdu Books | Free Urdu Books | Urdu PDF Books | Download Islamic Books | besturdubooks.wordpress.com

ISLAMIC BOOKS HUB

Free Authentic Islamic books and Video library in English, Urdu, Arabic, Bangla Read online, free PDF books Download , Audio books, Islamic software, audio video lectures and Articles Naat and nasheed

عربی کا معلم

وَهٰذَا لِسَانٌ عَرَبِيٌّ مُّبِينٌ

International Islamic Library Online (IILO)

Contact Us: Deenefitrat313@gmail.com ..... (Mobile: + 9 2 3 3 2 9 4 2 5 3 6 5)

Taleem-ul-Quran

Khulasa-e-Quran | Best Quran Summary

Al Waqia Magazine

امت مسلمہ کی بیداری اور دجالی و فتنہ کے دور سے آگاہی

TowardsHuda

The Messenger of Allaah sallAllaahu 3Alayhi wa sallam said: "Whoever directs someone to a good, then he will have the reward equal to the doer of the action". [Saheeh Muslim]

آہنگِ ادب

نوجوان قلم کاروں کی آواز

آئینہ...

توڑ دینے سے چہرے کی بدنمائی تو نہیں جاتی

بے لاگ :- -: Be Laag

ایک مختلف زاویہ۔ از جاوید گوندل

اردو ہے جس کا نام

اردو زبان کی ترویج کے لیے متفرق مضامین

آن لائن قرآن پاک

اقرا باسم ربك الذي خلق

پروفیسر عقیل کا بلاگ

Please visit my new website www.aqilkhan.org

AhleSunnah Library

Authentic Islamic Resources

ISLAMIC BOOKS LIBRARY

Authentic Site for Authentic Islamic Knowledge

منہج اہل السنة

اہل سنت والجماعۃ کا منہج

waqashashmispoetry

Sad , Romantic Urdu Ghazals, & Nazam

!! والله أعلم بالصواب

hai pengembara! apakah kamu tahu ada apa saja di depanmu itu?

Life Is Fragile

I don’t deserve what I want. I don’t want what I have deserve.

I Think So

What I observe, experience, feel, think, understand and misunderstand

creating happiness everyday

an artist's blog to document her creativity, and everyday aesthetics

mindandbeyond

if we know we grow

Muhammad Altaf Gohar | Google SEO Consultant, Pakistani Urdu/English Blogger, Web Developer, Writer & Researcher

افکار تازہ ہمیشہ بہتے پانی کیطرح پاکیزہ اور آئینہ کیطرح شفاف ہوتے ہیں

بے قرار

جانے کب ۔ ۔ ۔

سعد کا بلاگ

موت ہے اک سخت تر جس کا غلامی ہے نام

دائرہ فکر... ابنِ اقبال

بلاگ نئے ایڈریس پر منتقل ہو چکا ہے http://emraaniqbal.comے

Kaleidoscope

Urban desi mom's blog about everything interesting around.

I am woman, hear me roar

This blog contains the feminist point of view on anything and everything.

تلمیذ

Just another WordPress.com site

سمارا کا بلاگ

کچھ لکھنے کی کوشش

Guldaan

Islam, Pakistan and Politics

کائنات بشیر کا بلاگ

کہنے کو بہت کچھ تھا اگر کہنے پہ آتے ۔۔۔ اپنی تو یہ عادت ہے کہ ہم کچھ نہیں کہتے

Muhammad Saleem

Pakistani blogger living in Shantou/China

Writer Meets World

Using words to conquer life.

Musings of a Prospective Shrink

sugar spice and everything nice

Aiman Amjad

think, discuss, review and express...

%d bloggers like this: