خَتمِ نبَّوت پر حملے:-11

فرقہ اسماعیلی وآغا خانی
اسماعیلی مذہب  اسلام کے برخلاف واضح کفریہ عقائد اور قرآن وسنت کے منافی اعمال پر مشتمل مذہب ہے۔ اس مذہب کے بانی پیر صدر الدین ۷۰۰ھ میں ایران کے ایک گاؤں سبز وار میں پیدا ہوئے خراسان سے ہندوستان آئے سندھ پنجاب اور کشمیر کے دورے کئے اور نئے مذہب کی بنیاد ڈالنے کے حوالے سے ان دوروں میں بڑے بڑے تجربات حاصل کئے۔ چنانچہ سندھ کے ایک گاؤں کوہاڈا کو اپنا مرکز ومسکن قرار دیا ایک سو اٹھارہ سال کی طویل عمر پاکر پنجاب بہاولپور کے ایک گاؤں اوچ میں اس کا انتقال ہوا اس نے اسماعیلی مذہب کا کھوج لگا کر اسماعیلیوں کو یہ مذہب دیا۔ اسماعیلی مذہب کا کلمہ یہ ہے اشہد ان لا الہ الا اللہ واشہد ان محمدا رسول اللہ واشہد ان امیر المؤمنین علی اللہ اسماعیلی مذہب کے عقیدہ امامت کے متعلق عجیب وغریب نظریات ہیں ان کے نظریہ میں امام زمان ہی سب کچھ ہے وہی خدا ہے وہی قرآن ہے وہی خانہ کعبہ ہے وہی بیت المعمور (فرشتوں کا کعبہ) ہے وہی جنت ہے۔ قرآن کریم میں جہاں کہیں لفظ اللہ آیا ہے اس سے مراد بھی امام زمان ہی ہے۔
اسماعیلی خَتمِ نبَّوت کے منکر ہیں چنانچہ ان کے مذہب کے مطابق حضرت آدم علیہ السلام عالم دین کے اتوار ہیں‘حضرت نوح علیہ السلام سوموار ہیں حضرت ابراہیم علیہ السلام منگل ہیں حضرت موسیٰ علیہ السلام بدھ ہیں حضرت عیسی علیہ السلام جمعرات ہیں اور حضرت محمد ﷺ عالم دین کے روز جمعہ ہیں اور سنیچر یعنی ہفتہ کے آنے کا انتظار ہے اورر وہ قائم القیامة ہے۔ ان کے زمانہ میں اعمال نہیں ہوں گے بلکہ اعمال کا بدلہ دیا جائے گا۔ اسماعیلی مذہب میں قرآن کریم اور قیامت کا انکار کیا گیا ہے
قرآن امام زمان کو قرار دیا گیا ہے اور ان کے ساتویں حضرت قائم القیامة کے زمانہ  سنیچر کو قیامت قرار دیا گیا ہے۔ اسماعیلی مذہب کی بنیاد پانچ چیزوں پر ہے:
1-دعا کے لئے ہمیشہ جماعت خانہ میں حاضر ہونا اور وہیں دعا پڑھنا2-آنکھ کی نظرپاک ہونا3-سچ بولنا4-سچائی سے چلنا5-نیک اعمال۔
اسماعیلی مذہب میں نماز نہیں ہے اس کی جگہ دعا ہے روزہ فرض نہیں‘زکوٰة نہیں اس کے بدلے میں مال کا دسواں حصہ بطور دسوند امام زمان کو دینا لازم ہے حج نہیں ہے اس کے بدلے میں امام زمان کا دیدار ہے یا اسماعیلیوں کا حج پہلے ایران میں ہوتا تھا اب بمبئی بھی حج کرنے جاتے ہیں۔ اسماعیلی مذہب کی کفریات کی بناء پر ان کو مسلمان سمجھنا یا ان کے ساتھ مسلمانوں جیسا معاملہ کرنا جائز نہیں۔
ذکری فرقے کی بنیاد دسویں صدی ہجری میں بلوچستان کے علاقہ تربت میں رکھی گئی۔ ملا محمد اٹکی نے اس کی بنیاد رکھی جو ۹۷۷ھ میں پیدا ہوا اور ۱۰۲۹ھ میں وفات پاگیا۔ ملامحمد اٹکی نے پہلے مہدی ہونے کا دعویٰ کیا پھر نبوت کا دعویٰ کیا آخر میں خاتم الانبیاء ہونے کا دعویٰ کردیا۔ ذکری فرقے کا بانی ملا محمد اٹکی سید محمد جو نپوری
کے مریدوں میں سے تھا اس کی وفات کے بعد اس نے ذکری فرقے کی بنیاد رکھی سید محمد جونپوری
۸۴۷ھ میں جونپور صوبہ اودھ میں پیدا ہوا اس نے مہدی ہونے کا دعویٰ کیا اس کے پیروکاروں کو فرقہ مہدویہ کا نام دیا جاتا ہے اس فرقے کے بہت سے کفریہ عقائد ہیں مثلا سید محمد جونپوری کو مہدی ماننا فرض ہے اس کا انکار کفر ہے محمد جونپوری کے تمام ساتھی آنحضرت ﷺ کے علاوہ تمام انبیاء کرام علیہم السلام سے افضل ہیں احادیث نبوی کی تصدیق محمد جونپوری  سے ضروری ہے وغیرہ وغیرہ۔ سید محمد جونپوری نے افغانستان میں فراہ کے مقام پر وفات پائی جونپوری کے فرقہ سے ذکری فرقہ نکلا ہے ان دونوں فرقوں کے مابین بعض عقائد میں مماثلت پائی جاتی ہے اور بعض عقائد کا آپس میں فرق ہے مثلا مہدویہ کے نزدیک سید محمد جونپوری مہدی ہے اور ذکریہ کے نزدیک نبی آخر الزمان ہے۔ مہدویہ کے نزدیک سید
محمد جونپوری فراہ میں وفات پاگیا اور ذکریہ کے نزدیک وہ نور ہے مرا نہیں ہے۔ مہدویہ کے نزدیک آنحضرت ا خاتم الانبیاء ہیں اور ذکریہ کے نزدیک آپﷺنبی ہیں خاتم الانبیاء نہیں۔ مہدویہ کے نزدیک قرآن کریم آپ ﷺپر نازل ہوا اور آپ ﷺکی بیان کردہ تعبیر معتبر ہے اور ذکریہ کے نزدیک قرآن سید محمد جونپوری پر نازل ہوا ہے حضور ﷺ درمیان میں واسطہ ہیں اس کی وہی تعبیر معتبر ہے جو سید محمد جونپوری سے بروایت ملا محمد اٹکی منقول ہے۔ مہدویہ کے نزدیک قرآن کریم میں مذکور لفظ محمد سے نبی کریم ﷺمراد ہیں اور ذکریہ کے نزدیک اس سے مراد سید محمد جونپوری ہے مہدویہ ارکان اسلام نماز روزہ حج اور زکوٰة وغیرہ کی فرضیت کے قائل ہیں اور ذکریہ ان تمام کو منسوخ مانتے ہیں ذکریہ نے حج کے لئے کوہ مراد کو متعین کیا برکہور ایک درخت کو جو تربت سے مغرب کی جانب ہے مہبط الہام قرار دیا تربت سے جنوب کی جانب ایک میدان گل ڈن کو عرفات کا نام دیا تربت کی ایک کاریز کاریزہزئی کو زم زم کا نام دیا یہ کاریز اب خشک ہوچکی ہے جب کہ مہدویہ ان تمام اصطلاحات سے بے خبر ہیں۔ ذکری فرقہ کے وجود میں آنے کا سبب دراصل یہ بنا کہ سید محمد جونپوری کی وفات کے بعد اس کے مریدین تتر بتر
ہوگئے بعض نے واپس ہندوستان کا رخ کیا اور بعض دیگر علاقوں میں بکھر گئے انہی مریدوں میں سے ایک ملا محمد اٹکی سرباز ایرانی بلوچستان کے علاقہ میں جانکلا ان
علاقوں میں اس وقت ایران کے ایک فرقہ باطنیہ جو فرقہ اسماعیلیہ کی شاخ ہے آباد تھی یہ لوگ سید کہلاتے تھے ملامحمد اٹکی نے اس فرقہ کے پیشواؤں سے بات چیت کی مہدویہ اور باطنیہ عقائد کا آپس میں جب ملاپ ہوا تو اس کے نتیجے میں ایک تیسرے فرقہ ذکری نے جنم لیا ملامحمد اٹکی اپنے آپ کو مہدی آخر الزمان کا جانشین کہتا تھا‘اس فرقہ کا کلمہ ہے لاالہ الا اللہ نور پاک محمد مہدی رسول اللہقرآن وسنت کے برخلاف عقائد واعمال پر اس فرقہ کی بنیاد ہے چنانچہ یہ فرقہ عقیدہ خَتمِ نبَّوت کا منکر ہے ان کے مذہب میں نماز روزہ حج اور زکوٰة جیسے ارکان اسلام منسوخ ہیں نماز کی جگہ مخصوص اوقات میں اپنا خود ساختہ ذکر کرتے ہیں اسی وجہ سے ذکری کہلاتے ہیں ان کے علاقے میں مسلمانوں کو نمازی کہا جاتا ہے کہ یہ ذکر کرتے ہیں اور مسلمان نماز پڑھتے ہیں رمضان المبارک کے روزوں کی جگہ یہ ذی الحجہ کے پہلے عشرے کے روزے رکھتے ہیں حج بیت اللہ کی جگہ ستائیس رمضان المبارک کو کوہ مراد تربت میں جمع ہوکر مخصوص قسم کے اعمال کرتے ہیں جس کو حج کا نام دیتے ہیں زکوٰة کے بدلے اپنے مذہبی پیشواؤں کو آمدنی کا دسواں حصہ دیتے ہیں۔
ذکریوں کا عقیدہ ہے کہ ان کا پیشوا محمد مہدی نوری تھا عالم بالا واپس چلا گیا وہ کہتے ہیں نوری بود عالم بالا رفت ان کے عقیدہ کے مطابق وہ اللہ تعالیٰ کے ساتھ عرش
پر بیٹھا ہوا ہے حضور اکرم ا کو معراج اسی لئے کرایا گیا تھا کہ آپ ﷺمحمد مہدی کو اللہ تعالیٰ کے ساتھ عرش پر بیٹھا ہوا سمجھ لیں کہ سردار انبیاء یہ ہے میں نہیں
ہوں۔ (معاذ اللہ) ذکری مذہب چند مخصوص رسموں اور خرافات کا مجموعہ ہے ان کی ایک رسم چوگان کے نام سے مشہور ہے جس میں مردوزن اکٹھے ہوکر رقص کرتے ہیں ان کی ایک خاص عبادت سجدہ ہے صبح صادق سے ذرا پہلے مردوزن یکجا ہوکر بآوار بلند چند کلمات خوش الحانی سے پڑھتے ہیں پھر بلا قیام ورکوع ایک لمبا سجدہ کرتے ہیں یہ اجتماعی سجدہ ہوتا ہے اس کے بعد دو انفرادی سجدے کرتے ہیں۔ ذکری فرقہ عقیدہ خَتمِ نبَّوت اور ارکان اسلام کے انکار توہین رسالت اور بہت سے کفریہ عقائد کی بناء پر اسماعیلیوں اور قادیانیوں کی طرح زندیق ومرتد ہے انہیں مسلمان سمجھنا یا ان کے ساتھ مسلمانوں جیسا معاملہ کرنا جائز نہیں۔

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

Pak Islamic Library

Authentic Islamic Books

اردو سائبر اسپیس

Promotion of Urdu Language and Literature

سائنس کی دُنیا

اُردو زبان کی پہلی باقاعدہ سائنس ویب سائٹ

~~~ اردو سائنس بلاگ ~~~ حیرت سراے خاک

سائنس، تاریخ، اور جغرافیہ کی معلوماتی تحقیق پر مبنی اردو تحاریر....!! قمر کا بلاگ

BOOK CENTRE

BOOK CENTRE 32 HAIDER ROAD SADDAR RAWALPINDI PAKISTAN. Tel 92-51-5565234 Email aftabqureshi1972@gmail.com www.bookcentreorg.wordpress.com, www.bookcentrepk.wordpress.com

اردوادبی مجلّہ اجرا، کراچی

Selected global and regional literatures with the world's most popular writers' works

Urdu Islamic Books

islamic books in urdu | Best Urdu Books | Free Urdu Books | Urdu PDF Books | Download Islamic Books | besturdubooks.wordpress.com

ISLAMIC BOOKS HUB

Free Authentic Islamic books and Video library in English, Urdu, Arabic, Bangla Read online, free PDF books Download , Audio books, Islamic software, audio video lectures and Articles Naat and nasheed

عربی کا معلم

وَهٰذَا لِسَانٌ عَرَبِيٌّ مُّبِينٌ

International Islamic Library Online (IILO)

Contact Us: Deenefitrat313@gmail.com ..... (Mobile: + 9 2 3 3 2 9 4 2 5 3 6 5)

Taleem-ul-Quran

Khulasa-e-Quran | Best Quran Summary

Al Waqia Magazine

امت مسلمہ کی بیداری اور دجالی و فتنہ کے دور سے آگاہی

TowardsHuda

The Messenger of Allaah sallAllaahu 3Alayhi wa sallam said: "Whoever directs someone to a good, then he will have the reward equal to the doer of the action". [Saheeh Muslim]

آہنگِ ادب

نوجوان قلم کاروں کی آواز

آئینہ...

توڑ دینے سے چہرے کی بدنمائی تو نہیں جاتی

بے لاگ :- -: Be Laag

ایک مختلف زاویہ۔ از جاوید گوندل

اردو ہے جس کا نام

اردو زبان کی ترویج کے لیے متفرق مضامین

آن لائن قرآن پاک

اقرا باسم ربك الذي خلق

پروفیسر عقیل کا بلاگ

Please visit my new website www.aqilkhan.org

AhleSunnah Library

Authentic Islamic Resources

ISLAMIC BOOKS LIBRARY

Authentic Site for Authentic Islamic Knowledge

منہج اہل السنة

اہل سنت والجماعۃ کا منہج

waqashashmispoetry

Sad , Romantic Urdu Ghazals, & Nazam

!! والله أعلم بالصواب

hai pengembara! apakah kamu tahu ada apa saja di depanmu itu?

Life Is Fragile

I don’t deserve what I want. I don’t want what I have deserve.

I Think So

What I observe, experience, feel, think, understand and misunderstand

creating happiness everyday

an artist's blog to document her creativity, and everyday aesthetics

mindandbeyond

if we know we grow

Muhammad Altaf Gohar | Google SEO Consultant, Pakistani Urdu/English Blogger, Web Developer, Writer & Researcher

افکار تازہ ہمیشہ بہتے پانی کیطرح پاکیزہ اور آئینہ کیطرح شفاف ہوتے ہیں

بے قرار

جانے کب ۔ ۔ ۔

سعد کا بلاگ

موت ہے اک سخت تر جس کا غلامی ہے نام

دائرہ فکر... ابنِ اقبال

بلاگ نئے ایڈریس پر منتقل ہو چکا ہے http://emraaniqbal.comے

Kaleidoscope

Urban desi mom's blog about everything interesting around.

I am woman, hear me roar

This blog contains the feminist point of view on anything and everything.

تلمیذ

Just another WordPress.com site

سمارا کا بلاگ

کچھ لکھنے کی کوشش

Guldaan

Islam, Pakistan and Politics

کائنات بشیر کا بلاگ

کہنے کو بہت کچھ تھا اگر کہنے پہ آتے ۔۔۔ اپنی تو یہ عادت ہے کہ ہم کچھ نہیں کہتے

Muhammad Saleem

Pakistani blogger living in Shantou/China

Writer Meets World

Using words to conquer life.

Musings of a Prospective Shrink

sugar spice and everything nice

Aiman Amjad

think, discuss, review and express...

%d bloggers like this: