لَیلَةُ القَدر-3

شب قدر کی فضیلت احادیث شریفہ کی روشنی میں
عن انس رضی اﷲ عنہ قال قال رسول اﷲ اذا کان لیلۃ القدر نزل جبریل علیہ السلام فی کبکبۃ من الملائکۃ یصلون علیٰ کل عبد قائم او قاعد یذکر اﷲ عز و جل   حضرت انس بن مالکؓ سے روایت ہے انہو ں نے فرمایا کہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا  جب شب قدر ہوتی ہے تو جبریل علیہ السلام فرشتوں کے جھرمٹ میں اترتے ہیں، ہر اس بندے کے لئے دعاء رحمت کرتے ہیں جو کھڑے، بیٹھے اللہ کا ذکر کر رہا ہوتاہے۔ (مشکوۃ جلد ۱ ص ۱۸۲)
حضرت ابو ہریرہؓ سے مروی ہےکہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا  ’’من قا م لیلۃ القدر ایمانا واحتسابا غفر لہ ما تقدم من ذنبہ‘‘    جو شخص شب قدر میں ایمان کے ساتھ، ثواب کی امید میں عبادت کرتا ہے تو اس کے سابقہ گناہ بخش دئے جاتے ہیں۔ (بخاری)
حضرت ابن عباسؓ سے مروی طویل حدیث میں ہے۔ ’’واذا کانت لیلۃ القدر یا مر اللہ عزوجل جبریل علیہ السلام فیہبط فی کبکبۃ من الملائکۃ الی الارض ومعہم لواء اخضر فیرکز اللواء علی ظہر الکعبۃ ولہ ماءۃ جناح منہا جناحان لا ینشرہما الا فی تلک اللیلۃ فینشرہما فی تلک اللیلۃ فیجاوز المشرق الی المغرب فیحث جبریل علیہ السلام الملائکۃ فی ہذہ اللیلۃ فیسلمون علی کل قائم وقاعد ومصل وذاکر ویصافحونہم فیؤمنون علی دعاۂم حتی یطلع الفجر فاذا طلع الفجر ینادی جبریل! معاشر الملائکۃ الرحیل الرحیل فیقولون یا جبریل فما صنع اللہ فی حوائج المؤمنین من امۃ محمد فیقول نظر اللہ الیہم فی ہذۃ اللیلۃ فعفا عنہم وغفر لہم الا اربعۃ فقلنا یا رسول اللہ من ہم ؟ قال  مدمن خمر وعاق والدیہ وقاطع رحم ومشاحن، قلنا یا رسول اللہ وما المشاحن؟ قال ہو المصارم‘‘  جب لیلۃ القدر کی شب ہوتی ہے تو اللہ تعالی جبریل علیہ السلام کو حکم فرماتا ہے، چنانچہ وہ ملائکہ کے جھرمٹ میں زمین کی طرف اترتے ہیں، ان ملائکہ کے پاس سبز جھنڈے ہوتے ہیں جو وہ بیت اللہ کی چھت پر گاڑھ دیتے ہیں جبریل امین کے سو پَر ہیں جن میں سے وہ دو پر صرف اسی رات کھولتے ہیں وہ دو پر مشرق ومغرب سے تجاوز کرجاتے ہیں، جبریل امین اس رات فرشتوں کو ابھارتے ہیں چنانچہ وہ فرشتے ہر اس بندے سے سلام کرتے ہیں جو کھڑا ہو یا بیٹھا ہو، نماز پڑھ رہا ہو یا ذکر میں مشغول ہو اور ان لوگوں سے مصافحہ کرتے ہیں اور ان کی دعاؤں پر آمین کہتے ہیں یہاں تک کہ صبح ہوجاتی ہے پھر جب صبح ہوجاتی ہے تو جبریل امین فرشتوں کو آواز دے کر کہتے ہیں کہ بس اب چلو فرشتے عرض کرتے ہیں کہ اے جبریل اللہ تعالی نے امت محمدیہ کے مومنوں کی ضروریات کے بارے میں کیا فیصلہ فرمایا ہے؟ جبریل امین کہتے ہیں کہ اللہ تعالی نے انہیں نظر رحمت سے دیکھتے ہوئے ان سے درگزر فرماکر انہیں بخش دیا ہے سوائے چار شخصوں کے صحابہء کرام کہتے ہیں کہ ہم نے عرض کیا یا رسول اللہ ﷺ وہ چار اشخاص کون ہیں؟ آپ نے فرمایا عادی شراب خور، والدین کا نا فرمان، رشتے ناطے توڑنے والا اور مشاحین، ہم نے عرض کیا یا رسول اللہ ﷺ مشاحن سے کون مراد ہے؟ فرمایا مصارم یعنی کینہ پر ور۔(فضائل الاوقات للامام البیہقی)
عن انس بن مالک رضی اللہ عنہ قال دخل رمضان فقال رسول اللہ ان ہذا الشہر قد حضرکم وفیہ لیلۃ خیر من الف شہر من حرمہا فقد حرم الخیر کلہ ولا یحرم خیرہا الا محروم  حضرت انس بن مالک رضی اللہ عنہ سے روایت ہے انہوں نے فرمایا کہ رمضان کا مہینہ آیا تو رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا  بے شک یہ مہینہ تمہارے پاس حاضر ہوا ہے اور اس میں ایک رات ہے جو ہزار مہینوں سے بہتر ہے جو اس سے محروم رہا وہ تمام بھلائیوں سے محروم رہا، اور اسکی بھلائی سے وہی محروم ہوتا ہے جو (فطرتاً)واقعتا محروم ہے۔ (ابن ماجہ)۔
شب قدر میں کی جانے والی دعا
’’عن عائشۃؓ قالت قلت یا رسول اللہ أرأیت ان علمت ای لیلۃ القدر ما اقول فیہا قال قولی اللہم انک عفو تحب العفو فاعف عنی‘‘ (مشکوۃ ج۱)   حضرت عائشہ سے روایت ہے وہ فرماتی ہیں میں نے عرض کی یا رسول اللہ ﷺ مجھے بتلائیے کہ اگر مجھے معلوم ہوجائے کہ کونسی رات شب قدر ہے تو میں اللہ تعالی سے کیا دعا مانگوں ؟ آپ ﷺ نے ارشاد فرمایا تم یہ دعا کرو  اَللّٰہُمَّ اِنَّکَ عَفُوٌّ تُحِبُ الْعَفْوَ فَاعْفُ عَنِّی (اے اللہ تو بہت معاف فرمانے والا ہے اور معاف کرنا تجھے پسند ہے تو مجھے معاف فرما۔
 
شب قدر کی علامتیں
احادیث شریفہ میں شب قدر کی چند علامات بھی بیان کی گئی ہیں چنانچہ حضرت عبداللہ بن عباسؓ فرماتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا ’’لیلۃ سمحۃ طلقۃ لا حارۃ ولا باردۃ تصبح شمسہا صبیحتہا ضعیفۃ حمراء‘‘ (شعب الایمان للبیہقی)
   یہ ایک نرم، چمکدار رات ہے نہ گرم نہ سرد، اسکی صبح سورج کمزور اور سرخ طلوع ہوتا ہے۔
مسلم شریف جلد (۱ )میں یہ روایت مذکور ہے
’’عن زر بن حبیش یقول سالت ابی بن کعب فقلت ان اخاک ابن مسعود یقول من یقم الحول یصب لیلۃ القدر فقال رحمہ اللہ اراد ان لا یتکل الناس اما انہ قد علم انہا فی رمضان وانہا فی العشر الاواخر وانہا لیلۃ سبع وعشرین ثم حلف لا یستثنی انہا لیلۃ سبع وعشرین فقلت بای شیء تقول ذلک یا ابا المنذر قال بالعلامۃ او بالآیۃ التی اخبرنا رسول اللہ انہا تطلع یومئذ لا شعاع لہا‘‘۔
  حضرت زر بن حبیش سے روایت ہے وہ فرماتے ہیں کہ میں نے ابی بن کعب سے دریافت کیا اور عرض کیا بے شک آپکے (دینی) بھائی ابن مسعود فرماتے ہیں کہ جو تمام سال راتوں میں عبادت کرتا ہے تو شب قدر کو پالیتا ہے، پس حضرت ابی بن کعب نے فرمایا اللہ ابن مسعود پر رحم کرے انکے کہنے کا مقصد یہ تھا کہ لوگ بھروسہ نہ کریں (اور ایک رات کو مخصوص نہ کرلیں) ورنہ ان کو اس بات کا علم تھا کہ وہ رمضان میں ہے اور یہ کہ وہ آخری دہے میں ہوتی ہے اور یہ کہ وہ ستائیسویں رات کو ہوتی ہے پھر انہوں نے (یعنی ابی بن کعب) نے بلا استثناء قسم کھائی کہ وہ ستائیسویں رات ہے (حضرت زر بن حبیش فرماتے ہیں) میں نے عرض کیا اے ابو المنذر ( یہ حضرت ابی کی کنیت ہے) آپ یہ کس بنیاد پر فرما رہے ہیں انہوں نے فرمایا؟ اس نشانی کی بنیاد پر جسکی ہمیں رسول اللہ ﷺ نے خبر دی تھی کہ وہ رات (کی صبح سورج) طلوع ہوتا ہے تو اسکی شعاعیں نہیں ہوتی۔
مسند احمد میں حضرت عبادہ بن صامتؓ سے مروی طویل روایت میں ہے ’’قال رسول اللہ ان امارۃ لیلۃ القدر انہا صافیۃ بلجۃ کان فیہا قمرا ساطعا ساکنۃ ساجیۃ لا برد فیہا ولایحل لکوکب ان یرمی بہ فیہا حتی تصبح وان اماراتہا ان الشمس صبیحتہا تخرج مستویۃ لیس لہا شعاع مثل القمر لیلۃ البدر ولا یحل للشیطان ان یخرج معہا یومئذ‘‘۔
   رسول اللہ ﷺ نے فرمایا اس رات کی علامتوں میں سے یہ ہے کہ وہ چمکدار اور کھلی ہوئی ہوتی ہے صاف وشفاف، گویا کہ اس میں چاند کھلا ہوا ہے معتدل ہوتی ہے، نہ سرد نہ گرم، اس رات میں صبح تک آسمان کے ستارے شیاطین کو نہیں مارے جاتے، اور اس کی نشانیوں میں سے یہ بھی ہے کہ اس کے بعد کی صبح کو آفتا ب بغیر شعاع کے طلوع ہوتا ہے ایسا بالکل ہموار جیسا کہ چودھویں رات کا چاندہے، شیاطین کے لئے روا نہیں ہے کہ اس دن کے سورج کے ساتھ نکلے۔
Advertisements

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

اردو سائبر اسپیس

Promotion of Urdu Language and Literature

سائنس کی دُنیا

اُردو زبان کی پہلی باقاعدہ سائنس ویب سائٹ

~~~ اردو سائنس بلاگ ~~~ حیرت سراے خاک

سائنس، تاریخ، اور جغرافیہ کی معلوماتی تحقیق پر مبنی اردو تحاریر....!! قمر کا بلاگ

BOOK CENTRE

BOOK CENTRE 32 HAIDER ROAD SADDAR RAWALPINDI PAKISTAN. Tel 92-51-5565234 Email aftabqureshi1972@gmail.com www.bookcentreorg.wordpress.com, www.bookcentrepk.wordpress.com

اردوادبی مجلّہ اجرا، کراچی

Selected global and regional literatures with the world's most popular writers' works

Best Urdu Books

Free Online Islamic Books | Islamic Books in Urdu | Best Urdu Books | Free Urdu Books | Urdu PDF Books | Download Islamic Books | besturdubooks.net

ISLAMIC BOOKS HUB

Free Authentic Islamic books and Video library in English, Urdu, Arabic, Bangla Read online, free PDF books Download , Audio books, Islamic software, audio video lectures and Articles Naat and nasheed

عربی کا معلم

وَهٰذَا لِسَانٌ عَرَبِيٌّ مُّبِينٌ

International Islamic Library Online (IILO)

Donate Your Books at: Deenefitrat313@gmail.com ..... (Mobile: + 9 2 3 3 2 9 4 2 5 3 6 5)

Taleem-ul-Quran

Khulasa-e-Quran | Best Quran Summary

Al Waqia Magazine

امت مسلمہ کی بیداری اور دجالی و فتنہ کے دور سے آگاہی

TowardsHuda

The Messenger of Allaah sallAllaahu 3Alayhi wa sallam said: "Whoever directs someone to a good, then he will have the reward equal to the doer of the action". [Saheeh Muslim]

آہنگِ ادب

نوجوان قلم کاروں کی آواز

آئینہ...

توڑ دینے سے چہرے کی بدنمائی تو نہیں جاتی

بے لاگ :- -: Be Laag

ایک مختلف زاویہ۔ از جاوید گوندل

اردو ہے جس کا نام

اردو زبان کی ترویج کے لیے متفرق مضامین

آن لائن قرآن پاک

اقرا باسم ربك الذي خلق

پروفیسر عقیل کا بلاگ

Please visit my new website www.aqilkhan.org

AhleSunnah Library

Authentic Islamic Resources

ISLAMIC BOOKS LIBRARY

Authentic Site for Authentic Islamic Knowledge

منہج اہل السنة

اہل سنت والجماعۃ کا منہج

waqashashmispoetry

Sad , Romantic Urdu Ghazals, & Nazam

!! والله أعلم بالصواب

hai pengembara! apakah kamu tahu ada apa saja di depanmu itu?

Life Is Fragile

I don’t deserve what I want. I don’t want what I have deserve.

I Think So

What I observe, experience, feel, think, understand and misunderstand

Amna Art Studio

Maker of art and artsy things, art teacher, and loud thinker

mindandbeyond

if we know we grow

Muhammad Altaf Gohar | Google SEO Consultant, Pakistani Urdu/English Blogger, Web Developer, Writer & Researcher

افکار تازہ ہمیشہ بہتے پانی کیطرح پاکیزہ اور آئینہ کیطرح شفاف ہوتے ہیں

بے قرار

جانے کب ۔ ۔ ۔

سعد کا بلاگ

موت ہے اک سخت تر جس کا غلامی ہے نام

دائرہ فکر... ابنِ اقبال

بلاگ نئے ایڈریس پر منتقل ہو چکا ہے http://emraaniqbal.comے

Kaleidoscope

Urban desi mom's blog about everything interesting around.

تلمیذ

Just another WordPress.com site

سمارا کا بلاگ

کچھ لکھنے کی کوشش

Guldaan

Islam, Pakistan and Politics

کائنات بشیر کا بلاگ

کہنے کو بہت کچھ تھا اگر کہنے پہ آتے ۔۔۔ اپنی تو یہ عادت ہے کہ ہم کچھ نہیں کہتے

Muhammad Saleem

Pakistani blogger living in Shantou/China

Writer Meets World

Using words to conquer life.

Musings of a Prospective Shrink

sugar spice and everything nice

Aiman Amjad

think, discuss, review and express...

Pressure Cooker

Where I brew the stew to feed inner monsters...

My Blog

Just another WordPress.com site

%d bloggers like this: