ماہ صفر (حصہ آخر)

اسلام کی بنیاد توحید پر ہے۔

مسلمانو! دین اسلام کی بنیاد ایمان اور یقین پر رکھی گئی ہے۔ اللہ واحد کی ذات اور اس کی ساری صفات کو دل و جان سے ماننے کا نام توحید ہے۔
لا الہ الا اللہ محمد رسول اللہکا کلمہ ساری کائنات انسانی کے لئے دنیا و آخرت میں نجات کا ذریعہ ہے۔ کلمہ توحید میں اس بات کا اقرار کیا جاتا ہے کہ عبودیت کے لائق ہستی سوائے اللہ کے کوئی نہیں اور عبادت کا طریقہ بتلانے کے لئے اللہ تعالیٰ نے محمد صلی اللہ علیہ وسلم کو دنیا میں آخری رسول بنا کر بھیجا۔ اس کا مطلب یہ ہے جب ساری کائنات میں صرف حکم الہی چلتا ہے اور سارے اختیارات نفع و نقصان کے اسی کے ہاتھ میں ہیں، تو عبادت بھی اسی ایک وحدہ لاشریک کی ہونی چاہیے ۔ دنیا کی کسی مخلوق یا زمانے کو کوئی اختیار نہیں کہ وہ کسی کا کچھ بنا سکے یا بگاڑ سکے۔
ارشاد باری تعالیٰ ہے:
{وَإِن يَمْسَسْكَ اللّهُ بِضُرٍّ فَلاَ كَاشِفَ لَهُ إِلاَّ هُوَ وَإِن يُرِدْكَ بِخَيْرٍ فَلاَ رَآدَّ لِفَضْلِهِ يُصَيبُ بِهِ مَن يَشَاء مِنْ عِبَادِهِ وَهُوَ الْغَفُورُ الرَّحِيمُ} (107) سورة يونس
 
یعنی اللہ کی طرف سے اگر تجھ کو کوئی نقصان پہنچے تو اس کو دور کرنے والا سوائے اس کے کوئی نہیں ہے اور اگر تیرے ساتھ وہ بھلائی کا ارادہ کرتا ہے تو اس کے فضل کو کوئی روک نہیں سکتا۔
اس آیت کریمہ سے معلوم ہوا کہ سارے اختیارات صرف اللہ تعالیٰ کے ہاتھ میں ہیں۔ اللہ کے پیارے رسول صلی اللہ علیہ وسلم بعد نماز ہمیشہ یہ دعا پڑھتے تھے:     (( اللھم لا مانع لما اعطیت ولا معطی لما منعت ))
 ” آپ صلی اللہ علیہ وسلم فرماتے کہ اے اللہ! اگر تو دینے پر راضی ہو جائے تو اسے کوئی روک نہیں سکتا اور اگر کسی پر اپنا فضل روک دے تو اسے کوئی دلا نہیں سکتا۔ “
ارشاد الہی ہے:   {مَا أَصَابَ مِن مُّصِيبَةٍ إِلَّا بِإِذْنِ اللَّهِ  } (11) سورة التغابن
"یعنی آدمی کو جو بھی مصیبت پہنچتی ہے وہ صرف اللہ کے حکم سے پہنچتی ہے۔ “
غرض یہ کہ اللہ تعالیٰ کی صفات ابدی میں یہ بھی ہے کہ وہ مارتا اور جلاتا اور نفع اور نقصان دینے والا بھی وہی ہے، اس میں کسی زمانے کا کوئی دخل نہیں نہ کسی سال کا نہ کسی ماہ کا نہ کسی دن کا۔ یہی عقیدہ توحید ہے۔ اگر نقصان و ضرر کسی کو پہنچنا ہے تو وہ ضرور پہنچ کر رہے گا، خواہ وہ رمضان میں ہو یا ماہ صفر میں۔ ربیع الاول میں ہو یا محرم میں۔ قدرت الٰہی کا اظہار زبان رسالت سے یوں کیا جاتا ہے۔
{قُلِ اللَّهُمَّ مَالِكَ الْمُلْكِ تُؤْتِي الْمُلْكَ مَن تَشَاء وَتَنزِعُ الْمُلْكَ مِمَّن تَشَاء وَتُعِزُّ مَن تَشَاء وَتُذِلُّ مَن تَشَاء بِيَدِكَ الْخَيْرُ إِنَّكَ عَلَىَ كُلِّ شَيْءٍ قَدِيرٌ} (26) سورة آل عمران
” (اے پیغمبر صلی اللہ علیہ وسلم !)آپ کہ دیجئے کہ اے اللہ! تو ہی مالک الملک ہے جس کو چاہتا ہے ملک عطا کرتا ہے اور جس سے چاہتا ہے اسکو  چھین لیتا ہے اور عزت و ذلت بھی تیرے ہی طرف سے ہے۔ ساری بھلائی تیرے ہی ہاتھ میں ہے اور تو ہر چیز پر قدرت رکھنے والا ہے۔ “

ماہ صفر منحوس نہیں ہے:

قرآن و حدیث کے دلائل کی روشنی میں اگر دیکھا جائے تو ماہ صفر کی نحوست کی بدعقیدگی دراصل دور جاہلیت کے مشرکین کی پیداوار ہے جو سراپا باطل اور شرکیہ ہے۔ حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے مسلمانوں کو ان چیزوں سے آگاہ فرمایا:
چنانچہ ارشاد ہے:
(( لا عدویٰ ولا طیرۃ ولا ھامۃ ولا صفر )) ( بخاری ) (( ولا نوءولا غول )) ( مسلم )
 یعنی ہمارے اسلام میں چھوت چھات کا کوئی عقیدہ نہیں ہے اور نہ بدفالی کی کوئی حقیقت ہے۔ اسی طرح الو اور ماہ صفر کی نحوست بھی کوئی چیز نہیں۔   نچھتر اور نہ چڑیل وغیرہ کی کوئی حقیقت ہے۔ مطلب یہ ہے کہ یہ تمام دور جاہلیت، بت پرستوں اور توہم کے پجاریوں کے غلط اور باطل عقائد ہیں۔ ہندوستان کے مسلمانوں میں ماہ صفر کی نحوست اور تیرہ تیزی کے خوف کے عقائد جو پیدا ہوئے ہیں، یہ صرف ہندوؤں کے میل جول کے اثرات ہیں۔ ہندوستان کے ہنود کے شرکیہ عقائد اور مشرکین مکہ کے باطل عقائد کے درمیان کافی اشتراک ہے اور یہ باتیں رفتہ رفتہ برصغیر کے مسلمانوں میں بھی آگئیں۔ نعوذ باللہ من ذلک ۔

ماہ صفر میں سرور کائنات صلی اللہ علیہ وسلم کا بیمار ہونا:

عام طور پر یہ کہا جاتا ہے کہ ماہ صفر میں حضور صلی اللہ علیہ وسلم بیمار ہوئے تھے، اس لحاظ سے بھی ماہ صفر منحوس ہو سکتا ہے۔ حالانکہ یہ ماہ صفر کے منحوس ہونے کی کوئی دلیل نہیں ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا مزاج اقدس ماہ صفر میں بگڑا تھا، اس کا یہ معنی نہیں کہ ماہ صفر کی وجہ سے بگڑا تھا۔ اس ماہ میں اگر آپ صلی اللہ علیہ وسلم بیمار نہ بھی ہوتے تو کسی نہ کسی ماہ میں بیمار ہوتے اور وہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کا سبب بنتا۔ ماہ صفر میں آپ صلی اللہ علیہ وسلم کا بیمار ہونا صفر کی نحوست کی دلیل ہو سکتی ہے تو ماہ ربیع الاول بھی بدرجہ اولیٰ منحوس ہو گا، کیونکہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات اس ماہ میں واقع ہوئی اور یہ کسی ادنیٰ مسلمان کا بھی عقیدہ نہیں ہے کہ ماہ ربیع الاول منحوس مہینہ ہے۔ بلکہ وہ سب مسلمانوں کے ہاں مبارک و مسعود مہینہ ہے۔ اب معلوم ہوا کہ نحوست کسی سال یا دن یا ماہ کے ساتھ مخصوص نہیں ہے بلکہ جہاں کہیں ایمان اور عمل صالح خارج ہو جاتا ہے وہاں یقینا اس کو نحوست گھیر لیتی ہے۔
ارشاد ربانی ہے: {مَنْ عَمِلَ صَالِحًا فَلِنَفْسِهِ وَمَنْ أَسَاء فَعَلَيْهَا } (15) سورة الجاثية
” یعنی جو کوئی اچھا کام کرے گا اس کا فائدہ اسی کے لئے ہو گا اور جو خرابی کرے گا اس کا وبال بھی اسی پر ہو گا۔ “

آخری چہار شنبہ:

آخری چہار شنبہ صفر کے مہینے میں آتا ہے۔ عموماً لوگ اس میں عید مناتے ہیں، غسل کرتے ہیں اور اچھے کپڑے پہنتے ہیں اور تفریح کے لئے اپنے گھروں سے نکل جاتے ہیں اور ہریالی اور سبزہ پر قدم رکھنا سعادت سمجھتے ہیں۔ حالانکہ یہ تمام باتیں اپنی بنائی ہوئی ہیں۔ جواب میں یہ کہتے ہیں کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کو صفر کے آخری چہار شنبہ میں افاقہ ہوا تھا۔ حالانکہ یہ افاقہ دراصل آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کا پیش خیمہ تھا۔ بہرحال حضور صلی اللہ علیہ وسلم کو دیگر انبیاءکی طرح اللہ تعالیٰ کی طرف رخصت ہونا ضروری تھا , وہ کام اللہ کی رضا مندی کے تحت وجود میں آگیا, اس کا تعلق سعادت یا نحوست سے کچھ بھی نہیں۔ لہٰذا مسلمان ان عقائد باطلہ سے محفوظ رہیں اور صرف کتاب و سنت سے جو باتیں ثابت ہوتی ہیں ان کو اپنا لائحہ عمل بنائیں۔ اللہ سے دعا ہے کہ وہ ہم تمام مسلمانوں کو سنت کی راہ پر ہمیشہ چلنے کی توفیق عطا فرمائے اور شرک و بدعت سے ہم سب کو بچائے۔  آمین     
وصلى اللہ وسلم على نبینا محمد وسلم
Advertisements
4 comments
  1. جزاک اللہ خيراٌ
    بی بی آپ کھاتی کيا ہيں جس سے دماغ اتنا تيز ہو جاتا ہے ؟ مجھے بھی بتائيے ۔ ميرا دماغ تو بالکل خراب ہے ۔ کھاؤں تو شايد تھوڑا سا بہتر ہو جائے

    • اپنے شوہر کا دماغ
      اب بتائیں آپ کیسے کھائیں گے؟

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

اردو سائبر اسپیس

Promotion of Urdu Language and Literature

سائنس کی دُنیا

اُردو زبان کی پہلی باقاعدہ سائنس ویب سائٹ

~~~ اردو سائنس بلاگ ~~~ حیرت سراے خاک

سائنس، تاریخ، اور جغرافیہ کی معلوماتی تحقیق پر مبنی اردو تحاریر....!! قمر کا بلاگ

BOOK CENTRE

BOOK CENTRE 32 HAIDER ROAD SADDAR RAWALPINDI PAKISTAN. Tel 92-51-5565234 Email aftabqureshi1972@gmail.com www.bookcentreorg.wordpress.com, www.bookcentrepk.wordpress.com

اردوادبی مجلّہ اجرا، کراچی

Selected global and regional literatures with the world's most popular writers' works

Best Urdu Books

Free Online Islamic Books | Islamic Books in Urdu | Best Urdu Books | Free Urdu Books | Urdu PDF Books | Download Islamic Books | Dars e Nizami Books | besturdubooks.net

ISLAMIC BOOKS HUB

Free Authentic Islamic books and Video library in English, Urdu, Arabic, Bangla Read online, free PDF books Download , Audio books, Islamic software, audio video lectures and Articles Naat and nasheed

عربی کا معلم

وَهٰذَا لِسَانٌ عَرَبِيٌّ مُّبِينٌ

International Islamic Library Online (IILO)

Donate Your Books at: Deenefitrat313@gmail.com ..... (Mobile: + 9 2 3 3 2 9 4 2 5 3 6 5)

Taleem-ul-Quran

Khulasa-e-Quran | Best Quran Summary

Al Waqia Magazine

امت مسلمہ کی بیداری اور دجالی و فتنہ کے دور سے آگاہی

TowardsHuda

The Messenger of Allaah sallAllaahu 3Alayhi wa sallam said: "Whoever directs someone to a good, then he will have the reward equal to the doer of the action". [Saheeh Muslim]

آہنگِ ادب

نوجوان قلم کاروں کی آواز

آئینہ...

توڑ دینے سے چہرے کی بدنمائی تو نہیں جاتی

بے لاگ :- -: Be Laag

ایک مختلف زاویہ۔ از جاوید گوندل

اردو ہے جس کا نام

اردو زبان کی ترویج کے لیے متفرق مضامین

آن لائن قرآن پاک

اقرا باسم ربك الذي خلق

پروفیسر عقیل کا بلاگ

Please visit my new website www.aqilkhan.org

AhleSunnah Library

Authentic Islamic Resources

ISLAMIC BOOKS LIBRARY

Authentic Site for Authentic Islamic Knowledge

منہج اہل السنة

اہل سنت والجماعۃ کا منہج

waqashashmispoetry

Sad , Romantic Urdu Ghazals, & Nazam

!! والله أعلم بالصواب

hai pengembara! apakah kamu tahu ada apa saja di depanmu itu?

Life Is Fragile

I don’t deserve what I want. I don’t want what I have deserve.

I Think So

What I observe, experience, feel, think, understand and misunderstand

Amna Art Studio

Maker of art and artsy things, art teacher, and loud thinker

mindandbeyond

if we know we grow

Muhammad Altaf Gohar | Google SEO Consultant, Pakistani Urdu/English Blogger, Web Developer, Writer & Researcher

افکار تازہ ہمیشہ بہتے پانی کیطرح پاکیزہ اور آئینہ کیطرح شفاف ہوتے ہیں

بے قرار

جانے کب ۔ ۔ ۔

سعد کا بلاگ

موت ہے اک سخت تر جس کا غلامی ہے نام

دائرہ فکر... ابنِ اقبال

بلاگ نئے ایڈریس پر منتقل ہو چکا ہے http://emraaniqbal.comے

Kaleidoscope

Urban desi mom's blog about everything interesting around.

I am woman, hear me roar

This blog contains the feminist point of view on anything and everything.

تلمیذ

Just another WordPress.com site

سمارا کا بلاگ

کچھ لکھنے کی کوشش

Guldaan

Islam, Pakistan and Politics

کائنات بشیر کا بلاگ

کہنے کو بہت کچھ تھا اگر کہنے پہ آتے ۔۔۔ اپنی تو یہ عادت ہے کہ ہم کچھ نہیں کہتے

Muhammad Saleem

Pakistani blogger living in Shantou/China

Writer Meets World

Using words to conquer life.

MAHA S. KAMAL

INTERNATIONAL RELATIONS | POLITICS| POLICY | WRITING

Musings of a Prospective Shrink

sugar spice and everything nice

Aiman Amjad

think, discuss, review and express...

Pressure Cooker

Where I brew the stew to feed inner monsters...

%d bloggers like this: