زمین کا ینبیرو سے ٹکراؤ


ایسی ویب سائٹس کی تعداد بلاشبہ ہزاروں میں ہے جن پر بے شمار لوگ اس خدشے کا اظہار کر چکے ہیں کہ اکیسویں صدی کے ابتدائی سالوں میں کسی نامعلوم سیارے سے ٹکرا کر ریزہ ریزہ ہو جائے گی۔ زمین سے ٹکرانے والے اس سیارے کو "ینبیرو”کا نام دیا گیا ہے ۔ ینبیروکا نام 1960؁ میں پہلی بار ہمارے سامنے آیا تھا، یہ نظریہ پیش کرنے والے کے مطابق ہمارے نظام شمسی میں ہر 37ہزار سال بعد کوئی آوارہ سیارہ گھس آتا ہے اور بہت کچھ تباہ برباد کر کے رکھ دیتا ہے۔ تاہم "زشیریہ سٹیشن”نامی اس شخص نے کبھی یہ  دعویٰ نہیں کیا کہ ینبیرو کبھی زمین سے ٹکرائے گا۔بعض ماہرین کے مطابق ینبیرو ایک بونا سیارہ ہے، جو سورج کے ساتھ ہی وجود میں آیا تھا اور اس سیارے کو پہلی مرتبہ اس برس کے آخری دنوں میں دیکھا جا سکے گا۔اس سلسلے میں کوئی ٹھوس شواہد نہیں ملے۔کچھ لوگوں کے مطابق یہ وہی سیارہ ہے جسے 2005؁ میں امریکہ اداے "ناسا” نے دعویٰ کیا تھا کہ نظام شمسی کی آخری حد پر ایک دسواں سیارہ دریافت کیا گیا ہے۔ بعض ماہرین کے مطابق 2012؁میں یہ سیارہ زمین کے انتہائی قریب سے گزرے گا تاہم اس کے اپنے مدار سے بھٹک کر نظام شمسی میں گھس آنے کا کوئی امکان نہیں ینبیروکے ساتھ زمین کے تصادم کا خظرہ 10 میں سے2.0فیصد بیان کیا جاتا ہے۔
Advertisements
1 comment

اپنی رائے دیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

w

Connecting to %s

%d bloggers like this: